Pakistan  |  International  |  Business  |  Sports  |  Showbiz  |  Technology  |  Health  |  Wonder  |  Weather  |  Columns

مصر میں خاتون کی تین ہزار سال پرانی حنوط شدہ لاش دریافت

یہ تابوت 300 میٹر کھدائی کے بعد ملنے والے مقبرے سے دریافت ہوئے (فوٹو : رائٹر)

یہ تابوت 300 میٹر کھدائی کے بعد ملنے والے مقبرے سے دریافت ہوئے (فوٹو : رائٹر)

قاہرہ: مصر میں 3 ہزار سال پرانی خاتون کی حنوط شدہ لاش دریافت ہوئی ہے جو حیران کن طور پربالکل درست حالت میں ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق رواں ماہ کے آغاز میں مصر میں دریائے نیل کے مغربی کنارے ال اسساسیف قبرستان سے کھدائی کے دوران فرانس کے ماہرین آثار قدیمہ کو مقبروں سے دو قدیم تابوت ملے تھے۔

دریافت ہونے والے تابوتوں میں سے ایک خاتون کا تابوت تھا جسے بڑی مہارت کے ساتھ حنوط کیا گیا تھا۔ خاتون کے تابوت کو خصوصی ٹیم کی سربراہی میں مصر کے جنوبی شہر لکسور میں میڈیا کی موجودگی میں کھولا گیا۔

Egypt 2

اس تابوت میں خاتون کی لاش اس مہارت سے حنوط کی گئی تھی کہ یہ 3 ہزار سال گزرنے کے باوجود بالکل درست حالت میں ہے، تحقیق سے پتا چلتا ہے کہ یہ لاش ’تھویا‘ نامی خاتون کی ہے۔

Egypt 3

رواں برس مارچ سے جاری تحقیق کے دوران فرانس کی اسٹراس بورگ یونیورسٹی کے ماہرین آثار قدیمہ کو اسساسیف قبرستان سے دو مقبرے دریافت ہوئے تھے جن کے نزدیک یہ دو تابوت دفن تھے۔ ایک تابوت کا 17 ویں اور دوسرے تابوت کا تعلق 18 ویں شاہی خاندان کی نسل سے جا ملتا ہے۔

Egypt 4

دریافت ہونے والے مقبرہ 300 میٹر کھدائی کے بعد ملا، یہ مقبرہ تاریخ میں ’تھاؤ ارخٹ‘ سے منسوب ہے جو تقریباً چار ہزار سال پرانی سلطنت کے آثار ہیں۔ تابوت سے ملنے والی حنوط شدہ لاشیں بھی 1300 سے 1500 قبل مسیح کی معلوم ہوتی ہیں۔

Egypt-6

مقبرے سے دو تابوتوں کے علاوہ کئی دیگر نوادرات بھی دریافت ہوئے جن میں چھوٹے چھوٹے بت، مجسمے، لاشوں کو حنوط کرنے کے لیے استعمال ہونے والے اوزار اور جانوروں کے مجسمے بھی ملے ہیں۔

Egypt 5

فرانسیسی ماہرین آثار قدیمہ کا کہنا ہے کہ اس علاقے میں تحقیق جاری ہے اور کئی علاقوں کی کھدائی کی جارہی ہیں جس سے انسانی تاریخ کے کئی نئے سربستہ رازوں سے پردہ اُٹھنے کی امید ہے۔


News Source

مصر میں خاتون کی تین ہزار سال پرانی حنوط شدہ لاش دریافت